میں کب اور کس طرح ٹیسٹ کی ادائیگی کر سکوں گا؟

جب آپ اپنے سیمپل جمع کر چکے ہوں اور ان سیمپل کو ہمیں یا لیب کو واپس بھیجنے وقت ہمیں یا لہب کو ادائیگی کر سکتے ہیں، ہم ، چیک، آن لائین یار پوسٹل آرڈر کو قبول کرتے ہیں.

ایک ولدیاتی ٹیسٹ کے لئے رضامندی دینے کی ضرورت کسے ہوتی ہے؟

جب آپ ڈی این اے کے سیمپل اکٹھا کرنے کی کٹ کا آڈر کرتے ہیں تو اس کٹ کے اندر اندر آپ کو رضامندی فارم کا فارم بھی ملے گا۔ آپ اس فارم پر دستخط کر کے ٹیسٹ کروا سکتے ہیں . جب آپ ڈی این اے ٹیسٹ کو انجام دینے کے لئے ڈی این اے تشخیصی مرکز کا انتخاب کرتے ہیں تو ہماری لیبارٹری ٹیسٹنگ کے لیے آپ کے درخواست کردہ ڈی این اے کے نمونے ہی استعمال کرتی ہے ، آپ کو اس بارے میں یقین دہانی کرائی جاتی ہے کہ آپ کے ڈی این اے کے نمونے اور ٹیسٹ کے نتائج کسی اور کو جاری نہیں کیے جاتے جب تک آپ ہدایات نہ دیں یا عدالت کا حکم نہ ہو۔.

یہ ٹیسٹنگ کب کروا سکتے ہیں؟

یہ ٹیسٹنگ بچے کی پیدائش سے قبل ” سی وی ایس” اور ” ایمائنو سنتیسس” کے عمل کے ذریعہ بھی ڈی این اے کے نمونے جمع کیے جا سکتے ہیں

یہ ٹیسٹنگ بچے کی پیدائش کے وقت بھی کی جا سکتی ہے

یہ ٹیسٹنگ کسی بھی عمر کا شخص کروا سکتا ہے.

میں اپنے نتائج کیسے حاصل کر سکتا ہوں؟

ڈی این اے ٹیسٹ کے نتائج 5 سے 7 کاروباری دنوں کے بعد حاصل ہو جاتے ہیں جبکہ ہم آپ کے نمونے وصول کر چکے ہوں . یہ ایک دستاویزی رپورٹ کی صورت میں آپ کو واضح طور پر بتاتا ہے کہ آپ کا حیاتیاتی تعلق موجود ہے یا نہیں

ڈی این اے ٹیسٹنگ کے لیے خون لینے کی ضرورت ہوتی ہے؟

جی نہیں. گال کے خلیات اور تھوک میں ڈی این اےکیا پایا جاتا ہے ، اس کو “گال سواب” کے ذریعے جمع کیا جا سکتا ہے.

مجھے یہ کس طرح پتہ چلے گا کہ میں اپنے نمونے درست طریقے سے جمع کر رہا ہوں؟

غلطیوں پر فکر مند ہونے کی ضرورت نہیں ہے. ہمارا یقین صرف اس بات پر ہونا چاہیے کہ آپ نے اتنے خلیات جمع کر لیئے ہوں جو جانچ کے لئے کافی ہوں’ آپ کو اس بات کا خیال رکھنا ہو گا کہ آپ درست شخص کے نمونے جمع کر رہے ہیں اور نمونوں کو صحیح طریقے سے لیبل کیا گیا ہو،ان باتوں کا خیال رکھتے ہوئے کوئی بھی چیز ڈی این اے ٹیسٹنگ کو متاثر کر سکے۔.

کیا ایک درست نتیجہ حاصل کرنے کے لئے ماں کو بھی ٹیسٹ ہیں شامل کرنے کی ضرورت ہے؟

ہم ڈی این اے ٹیسٹنگ میں ماں کی شمولیت کی حوصلہ افزائی کرتے ہیں کیونکہ ماں کی شرکت سے اہم جینیاتی معلومات کی فوری اور براہ راست تجزیہ کی سہولت فراہم کرتا ہے. تاہم، اگر ماں کی شمولیت ممکن نہیں ہے تو بھی ہم ولدیاتی ٹیسٹنگ کے حتمی نتائج فراہم کر سکتے ہیں

میں کب اور کس طرح ٹیسٹ کی ادائیگی کر سکوں گا؟

جب آپ اپنے سیمپل جمع کر چکے ہوں اور ان سیمپل کو ہمیں یا لیب کو واپس بھیجنے وقت ہمیں یا لہب کو ادائیگی کر سکتے ہیں، ہم ، چیک، آن لائین یار پوسٹل آرڈر کو قبول کرتے ہیں.

یہ ٹیسٹ کتنے کا ہوتا ہے؟

جب آپ اپنے سیمپل جمع کر چکے ہوں اور ان سیمپل کو ہمیں یا لیب کو واپس بھیجنے وقت ہمیں یا لہب کو ادائیگی کر سکتے ہیں، ہم ، چیک، آن لائین یار پوسٹل آرڈر کو قبول کرتے ہیں.

کے لئے اضافی رپورٹیں کیا ہیں؟

بعض صورتوں میں خاندان کے اراکین کے لئے اضافی رپورٹ کی کاپیاں کی ضرورت ہوتی ہے.

میں برطانیہ اور بیرون ملک کسی دوسرے میں ایک نمونہ لے اور اب بھی کٹوں کی جانچ کے لئے واپس بھیجنے کے قابل ہو جائے گا؟

جی ہاں، ہم اکثر ایک ہی ملک میں ٹیسٹ کا حصہ منعقد گاہک اور دوسرے ٹیسٹ کے باقی ہے. اس مثال میں، براہ مہربانی درخواست ہے کہ ایک ہی سیریل نمبر کے ساتھ ایک کٹ دونوں مقامات پر بھیجا جاتا ہے.

گال سواب کیا ہے؟

گال سواب ایک طویل کپاس کی بڈ کی طرح لگتا ہے. سواب کا سربالکل ایک باقاعدہ کپاس کے بڈ کے سر کی طرح ہوتا لیکن اس سے کچھ پختہ ہوتا ہے جب ہم ہلکے دبائو کے ساتھ گال کی اندرونی سطح پر ملتے ہیں تو گال سے خلیات آسانی کے ساتھ سواب پر چپک جاتے ہیں ۔ ہر فرد کیلئے چار عدد سواب ہر کٹ میں موجود ہوتا ہے.

کیا سیمپل کا جمع کرنا درد کے بغیر ہوتا ہے؟

جی ہاں.ڈی این اے ٹیسٹنگ کٹ “گال سواب”، جسے آپ گال کی اندرونی سطح پر رگڑ کر گال سے خلیات کو جمع کرتے ہیں ان گال کے خلیات میں ڈی این اے موجود ہوتا ہے. چونکہ اس سیمپل جمع کرنے میں سوئیاں استعمال نہیں ہوتی ہیں اسی لیے یہ درد کے بغیر ہوتا ہے

آپ ٹیسٹنگ کیلئے خون استعمال نہیں کرتے کیا پھر بھی آپ کے نتائج بالکل درست ہوتے ہیں ؟

جی ہاں.آپ کے خون کے خلیات، گال کے خلیات یا بالوں کی جڑوں کے خلیات ان سب میں ڈی این اے ایک ہی طرح کے ہوتے ہیں اس لیے اس بات سے کوئی فرق نہیں ہوتا کہ آپکے کونسے سیمپل کا ڈی این اے استعمال کیا گیا ہے

کیا میں بوٹس یا دوسری کمپنیوں کے بنے ہوئے کاٹن/ اون کے بڈ استعمال کر سکتا ہوں؟

نہیں- ی این اے کی تشخیص سینٹر سے جو سواب آپ کو ملتے ہیں وہ کپاس / اون کے بنے ہوئے نہیں ہوتے ہیں بلکہ ایک اسپیشل مواد ڈکرون سے بنے ہوتے ہیں. یہ ایک مختلف مواد ہے جو کہ زیادہ سے زیادہ ڈی این اے جمع کرنے میں مدد کرتا ہے

ڈی این اے کے جمع کیئے گئے نمونے کتنی دیر تک درست حالت میں رہ سکتے ہیں؟

اگرچہ اس بات کی کوئی ضمانت نہیں دی جا سکتی ہے کہ اس میں سے کوئی قابل استعمال نمونہ نکلا جا سکے۔ ہاں جمع کیے گئے نمونے کی کوئی ختم ہونے کی مدَدت نہیں ہوتی . اگر جمع کیے گئے نمونے کو خشک نہ کیا جائے تو اس بات کا زیادہ امکان ہو گا کہ سڑنے سے سواب نمونہ تباہ ہو جائے

جین پول کیا ہے؟

جین پول کسی فرد کی ممکنہ طور پر دستیاب جینیاتی معلومات ہے. ہر شخصی جینیاتی معلومات کا نصف ماں سے اور نصف والد سے حاسل کرتا ہے. ایک ولدیاتی ٹیسٹ میں ایک ماں، بچے اور مبینہ طور پر والد کو جانچنے سے ہم حیاتیاتی ماں اور بچے میں جینیاتی شراکتی معلومات کا مؤاخذہ کر سکتے ہیں. بچے کی جینیاتی معلومات کا باقی نصف حیاتیاتی والد کی طرف سے آنا چاہیے. بچے سے مبینہ والد کے ڈی این اے پیٹرن کا موازنہ کرتے ہوئے، ہم تعین کر سکتے ہیں کہ مبینہ والد بچے کے حیاتیاتی والد ہیں

ڈی این اے ٹیسٹنگ دو نسلی کلائنٹ کے ٹیسٹ کو کس طرح متاثر کرتا ہے؟

اگر آپ ایک ایسے فرد ہیں جو دو نسلی ہے یا ایسی نسل سے تعلق ہے جس کا ڈیٹا بیس دستیاب نہیں ہے اس صورت میں ہمارا حساب دونوں نسل پر مشتعمل ہو گا (مثال کے طور پر، کاکیشین (سفید) اور بلیک ڈیٹا بیس کی تعدد کی بنیاد پر ہوتا ہے. ہر ایک کی تحقیقات کے لئے سب سے کم (پی آئی) مشترکہ ولدیت انڈیکس ((سی پی آئی) یا (پی او پی) کو شمار کرنے کے لیے استعمال کیا جاتا ہے. ان نتائج کے لئے (پی او پی) کی قیمت سب سے زیادہ کم ہوتی ہے

کیا ڈی این اے ٹیسٹنگ ایسےشخص کی ہو سکتی ہے جوفوت ہو چکا ہو، لاپتہ ہو یا دستیاب نا ہو؟

اگر ٹیسٹ میں شامل ایک پارٹی فوت ہو چکی ہو یا کسی وجہ سے دستیاب نا ہو تو خاندان کے دوسرے افراد ڈی این اے کا نمونہ فراہم کر کے اس شخص کے ڈی این اے کی تعمیر نو میں مدد کر سکتے ہیں۔ اس سلسلے میں اس شخص کے والدین، مکمل یا نصف بہن بھائیوں، یا بچوں کے ڈی این اے کی جانچ ضروری ہے. جینیاتی تعمیر نو کی لاگت کے لئے دستیاب ارکان کی تعداد اور ان کی جانچ پر منحصر ہے. اس سلسلے میں مزید سوالات اور مشورہ کیلئے ہم سے مشورہ کریں .

دادا/دادی اور نانا/نانی ڈی این اے ٹیسٹ کیا ہے؟

دادا/دادی اور نانا/نانی ڈی این اے ٹیسٹ اس وقت کیا جاتا ہے جب ڈی این اے ٹیسٹنگ کے لئے مبینہ والدین دستیاب نا ہوں . چونکہ دادا/دادی اور نانا/نانی اپنے جین اپنے بچوں کو منتقل کرتے ہیں اس لیے دادا/دادی اور نانا/نانی اور یہی جین مبینہ والدین سے اپنے بچوں میں منتقل ہوتے ہیں اس لیے یہ ٹیسٹ پوری درستگی کے ساتھ ہوتا ہے۔

ایک بہن /بھائی کے ٹیسٹ میں کن کا ٹیسٹ کیا جاتا ہے؟

اگر مبینہ طور پر والد جانچ کے لئے دستیاب نا ہوں لیکن ان کے بچے موجود ہون تو اس ٹیسٹ سے یہ پتہ لگایا جا سلتا ہے کہ آہا کہ وہ مکمل یا نصف بہن بھائی ہیں. اس سلسلے میں بچوں کی ماں کا ڈی این اے کا نمونہ بھی شامل کرنے کی درخواست کرتے ہیں

ڈی این اے ٹیسٹنگ کو گود لینے کے معاملات میں کس طرح استعمال کیا جا سکتا ہے؟

گود لینے سے متعلق پیشہ ور افراد اور والدین کی طرف سے یہ ایک عام سی درخواست ہوتی ہے کہ درست طریقے سے حقیقی باپ کی ولدیت معلوم کی جائے تاکہ گود لینے کی درخواست کی کارروائی کو مستحکم کیا جا سکے. اگرچہ گود لینے کے عمل میں ہر کیس کی نوعیت مختلف ہوتی ہے ، رچرڈ کیس کے کیس میں فروغ مقدمات کی وجہ سے یہ ٹیسٹ اب ایک اعلی ترجیح بن گئے ہیں. ولدیاتی ٹیسٹنگ ثبوت کے طور پر کام کرتا ہے کہ بالکل درست والد گہاں رہتے ہیں اور کسی کارروائی میں ان کی شرکت جنیاتی ٹیسٹ میں ترقی کی وجہ سے بیماریوں اور سنگین طبی حالات کی پیشگی اطلاح کی وجہ سے بھی پیدائشی والد کی شناخت معلوم کرنے کی ضرورت رہتی ہے پیدائشی والد کے شناخت کے بغیر، نصف بچے کی طبی معلومات نامعلوم ہی رہتی ہیں ، بعد میں اگر ضرورت پیش آئے تو بہت مشکل پیش آ سکتی ہے

میٹرنٹی ڈی این اے ٹیسٹنگ کے لئے کیا دلیل ہے؟

ولدیاتی ٹیسٹنگ کے طریقہ کار کی طرح مبینہ طور پر ماں اوربچے کے درمیاں حیاتی تعلق کا تجربہ کیا جاتا ہے. بچوں کے حالیہ کیسز جن کو میڈیا میں بھی جگہ ملی کہ جس میں پیدائش کے وقت بچے کے تبدیل ہونے کے واقعات پیش آئے تو ان ٹیسٹ ضرورت پیش آئی . مبینہ طور پر ماں کے ساتھ بچے کے ڈی این اے کے پیٹرن کا موازنہ کرتے ہوئے، ہم اس بات کا تعین کر سکتے ہیں کہ مبینہ طور پر ماں اور بچے میں مادری حیاتیاتی تعلق موجود ہے.